Preparation of strong solar cells from burnt hair

78

کوئنز لینڈ: انسانی بال میں موجود قدرتی اجزا کی بنا پر اب ایسے سولر(شمسی) سیلوں کو مضبوط اور بہتر بنایا جاسکتا ہے جو روایتی سلیکان سیل کے مقابلے میں زیادہ بجلی خارج کرتے ہیں۔ انہیں پرووسکائٹ شمسی سیل کہا جاتا ہے۔

گزشتہ عشرے سے میں روایتی مونوکرسٹلائن سلیکان شمسی سیل کی بجائے پرووسکائٹ شمسی سیلوں کی افادیت سامنے آئی ہے۔ لیکن پرووسکائٹ شمسی سیل بہت نازک اور غیرپائیدار ہوتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ اب تک پرووسکائٹ شمسی سیل تجارتی پیمانے پر تیار نہیں کیے جاسکے ہیں۔ لیکن اب انسانی بالوں میں اس کا حل سامنے آیا ہے۔

اس سے قبل یونیورسٹی آف کوئنزلینڈ کے سائنسداں انسانی بال سے اخذ کردہ اجزا سے اوایل ای ڈی بناتے رہے ہیں۔ اب پرووسکائٹ شمسی سیلوں میں انہیں استعمال کیا جارہا ہے۔ انسانی بال میں کاربن اور نائٹروجن کی بڑی مقدار موجود ہوتی ہے جو روشنی خارج کرنے والے انجینیئرنگ نظاموں کےلیے بہت ضروری ہوتی ہے۔ پہلے انسانی بالوں کو 240 درجے سینٹی گریڈ پر جلایا گیا تاکہ وہ مزید سادہ اجزا میں تقسیم ہوجائیں اور ان سے نائٹروجن اور کاربن کو الگ کرلیا جائے۔