PEMRA Imposed Ban On Airing Drama Serial Ishqiya and Pyar Kay Sadqay

33

PEMRA Imposed Ban On Airing Drama Serial Ishqiya and Pyar Kay Sadqay

پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) نے حال ہی میں اختتام پزیر ہونے والے ٹی وی ڈراموں “عشقیہ” اور”پیارکے صدقے” کو دوبارہ دکھانے پرپابندی عائد کردی ہے۔

پیمرا کی جانب سے جاری کی جانے والی پریس ریلیز میں کہا گیا ہےکہ سماجی اور مذہبی اقدار کے منافی مواد نشرکرنے پرپیمرا آرڈیننس سیکشن 27 کے تحت کارروائی کرتے ہوئے دونوں ڈراموں کے نشر مکررپرپابندی عائد کردی ہے۔

دونوں ڈرامے نہ صرف اے آر وائے ڈیجیٹل اور ہم ٹی وی بلکہ ان کے دیگر چینلزاے آروائے زندگی اورہم ستارے پر بھی نشرنہیں کیے جا سکیں گے۔

پریس ریلیزمیں اے آروائی پرآن ائرہونے والے ایک اور ڈرامہ سیریل “جلن ” کے حوالے سے بھی واضح کیا گیا ہے کہ شکایات موصول ہونے پر چینل کو ڈرامہ کے مواد کا جائزہ لینے کا حکم دیا ہے۔ مزید شکایات موصول ہونے یا ڈرامے کے اسکرپٹ کو ملکی اقدارکے مطابق نہ بنائے
جانے پر”جلن” کیخلاف بھی سیکشن 27 کے تحت کارروائی کی جائے گی۔

سوشل میڈیا پر ڈراموں کے موضوعات کیخلاف اعتراضات کے تناظرمیں پیمرا کی جانب سے پریس ریلیز میں مزید کہا گیا ہے کہ “ناظرین کی جانب سے ڈراموں میں دکھائے جانے والے مواد بالخصوص مرکزی خیال پرتنقید کی جارہی ہے اور ان میں مقدس رشتوں کی پامالی سے متعلق مواد نشر کرنے پر شدید اضطراب پایا جاتا ہے”۔

پیمرا نے واضح کیا کہ اس حوالے سے ناظرین روزانہ کی بنیاد پر پاکستان سٹیزن پورٹل، پیمرا کے سوشل اکاونٹس، اور پیمرا کال سینٹرز پر شکایات درج کروا رہے ہیں۔

پریس ریلیز میں یہ بھی بتایا گیا کہ متعلقہ چینلز کو بارہا ناظرین کے تحفظات سے آگاہ کرتے ہوئے ڈراموں کامواد معاشرتی، مذہبی، سماجی اور اخلاقی اقدارکے مطابق بنانے کی ہدایت کی جاچکی ہے” چینلز کی جانب سے ڈراموں کے اسکرپٹ میں بہتری نہ ہونے پر 18 اگست کو بھی مراسلے میں ڈراموں کا مواد پاکستان کے اقدار کے مطابق بنانے کی حتمی ہدایت کی گئی تھی” ۔

پیمرا نے پیار کے صدقے اور عشقیہ کے نشرمکررپرپابندی عائد کرنے کے علاوہ تمام ٹی وی چینلز، میڈیا ہاؤسز اور پروڈکشن ہاؤسز کو ڈراموں کےمواد کا جائزہ لینے کی ہدایت کرتے ہوئے باور کرایا ہے کہ ڈرامے پر لگنے والے سرمائے اور وقت سے قطع نظر اگرکسی ڈرامے کا مواد ملکی اقدار کے منافی اور ناظرین کی توقعات کے برعکس ہوا تو کسی وارننگ کے بغیر ڈرامے پر پابندی عائد کی جائے گی۔

س حوالے سے پیمرا نے تمام اسٹیک ہولڈرز سےمستقبل میں بننے والے ڈراموں کے مواد پر بھی فی الفورنظرثانی کرنے کی درخواست کی۔

عشقیہ
اے آر وائی پر نشرکیے جانے والے ڈرامے ڈرامہ سیریل ” عشقیہ” کے لکھاری محسن علی شاہ اورڈائریکٹر بدرمحمود تھے، اس کہانی میں 3 اہم کردار حمزہ(فیروزخان ) حمنہ (رمشہ خان) اور رومی (ہانیہ عامر) تھے، حمنہ سے پیارکرنے والا حمزہ اس کی شادی کہیں اور طے ہونے پر بدلہ لینے کے لیے اسکی بہن رومی سے شادی کرتا ہے۔ بعد میں اسے رومی سے پیارہوجاتا ہے لیکن وہاصلیت جاننے کے بعد اسے چھوڑ دیتی ہے۔ یہ ڈرامہ خاصے سنجیدہ موضوع پربنایا گیا تھا جس کے ٹریجک اختتام نے شائقین کو خاصا افسردہ بھی کیا اور سوشل میڈیا پر اس حوالے سے خوب تبصرے دیکھنے میں آئے۔

پیار کے صدقے
ہم ٹی وی پر دکھائے گئے ڈرامہ ” پیارکے صدقے” اس لحاظ سے منفرد رہا کہ اس میں ہیروہیروئن کا تصورہی تبدیل کردیا گیا۔ انتہائی معصوم اورزمانے کی چالاکیوں سے نابلد ماہ جبین (یمنیٰ زیدی) اورعبداللہ (بلال عباس) کی حادثاتی شادی کے بعد عبداللہ کا سوتیلا باپ سرور (عمیر رانا) بہو پربری نظررکھتا ہے اوراسی وجہ سے مقبولیت کے ساتھ ساتھ اس ڈرامے کو تنقید کا نشانہ بھی بنایا گیا۔

مومنہ درید پروڈکشن کے بینرتلے بننے والے اس ڈرامہ کی رائٹرزنجبیل عاصم شاہ اورڈائریکٹر فاروق رند تھے